259

کاروبار کے فروغ کے لیے نوجوانوں کو 5 لاکھ روپے تک بلاسود قرضے دیے جائینگے

اسلام آباد (نیوز ایجنسیاں) بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کی مختص رقم بڑھاکر 364ارب روپے کر دی گئی ۔ 10ہزار مزید طالب علموں کو بے نظیر انڈر گریجویٹ اسکالرشپ دیا جائے گا جس کیلئے 9 ارب روپے سے زائد رقم مختص کیا گیا ہے۔ وزیر خزانہ مفتاح نے قومی اسمبلی کو بتایا کہ ہم نے بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کی مختص رقم میں اضافہ کیا ہے جو 2021-22 میں 250 ارب روپے تھی۔ 2022-23 کے بجٹ میں یہ رقم بڑھا کر 364 ارب روپے کر دی گئی ہے۔بے نظیر نشو و نما پروگرام تمام اضلاع تک بڑھا دیا جائیگا جس پر تقریبا 21.5 ارب روپے کی لاگت آئے گی۔پاکستان بیت المال کے لیے 6 ارب روپے کا بجٹ مختص کیا گیا ہے۔،کاروبار کے فروغ کے لیے نوجوانوں کو 5 لاکھ روپے تک بلاسود قرضے دیے جائینگے۔وزیر خزانہ نے بتایا کہ کاروبار کے فروغ کے لیے نوجوانوں کو ڈھائی کروڑ تک آسان شرائط پر قرضے دیے جانے کی اسکیم کا اجرا کرینگے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں