257

جعلی ڈگریاں تیار کرنے والے گروہ کا سرغنہ مفررو اینٹی کرپشن کی ریڈنگ ٹیم نے گرفتار کر لیا

*عاصمہ اعجازچیمہ،ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن سرگودھا کی سربراہی میں اینٹی کرپشن سرگودھاکا اشتہاریوں اور عدالتی مفرروں کے خلاف کریک ڈاؤن کامیابی سے جاری۔*

*جعلی ڈگریاں تیار کرنے والے گروہ کا سرغنہ مفررو اینٹی کرپشن کی ریڈنگ ٹیم نے گرفتار کر لیا۔*

*اینٹی کرپشن سرگودھا نے2012سے انتہائی مطلوب اشتہاری ملزم کو گرفتار کر لیا۔*

*رانا محمد اخلاق ولد محمد شریف 7مقدمات میں اشتہاری تھا اور 2012سے مفرور تھا۔*

محکمہ اینٹی کرپشن سرگودھا نے عاصمہ اعجاز چیمہ،ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن سرگودھا کی سربراہی میں عدالتی/ اشتہاریوں کے خلاف کریک ڈاؤن کامیابی سے جاری ہے۔
تفصیلات کے مطابق رانا محمداخلاق ولد محمد شریف (پرائیویٹ پرسن) نے محکمہ مال اور عدالتی اہلکاران سے ملی بھگت کر کے جعلی ڈگریاں تیار کر کے مختلف پلاٹس پر قبضہ کر وائے تھے۔ رانا محمد اخلاق و دیگر اہلکاران کے خلاف سال2012میں تھانہ اینٹی کرپشن سرگودھا میں 7مقدمات درج ہوئے تھے۔ تفتیش کے دوران ملزمان اپنی بے گناہی ثابت نہ کر سکے جن کیخلاف ریجنل ڈائریکٹر، اینٹی کرپشن سرگودھا نے جوڈیشل ایکشن منظور کرتے ہوئے ملزمان کو گرفتار کرنے کا حکم دیا۔رانا محمد اخلاق گرفتاری سے بچنے کے لیے مفرور ہو گیا تھا جسے آج اینٹی کرپشن سرگودھا کی ریڈنگ ٹیم نے محمد اکرم، سرکل آفیسر، اینٹی کرپشن سرگودھا کی نگرانی میں ریڈ کر کے ڈرامائی انداز میں گرفتار کر کے حوالات بند کر دیا جس سے تفتیش جاری ہے۔ ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن سرگودھاعاصمہ اعجاز چیمہ کی سربراہی میں ڈائریکٹر جنرل اینٹی کرپشن پنجا ب اور حکومت پنجاب کے ویژن کے مطابق ایسی کاروائیاں اینٹی کرپشن سرگودھا ریجن میں جاری رہیں گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں